Breaking News
Home / انٹرنیشنل / بھارت اور چین کی دشمنی سے تو آپ واقف ہیں ، مگر آسٹریلیا ہر معاملے میں چین کی شدید مخالفت کیوں کرتا ہے ؟ ایسے حقائق جن سے آپ ناواقف ہونگے

بھارت اور چین کی دشمنی سے تو آپ واقف ہیں ، مگر آسٹریلیا ہر معاملے میں چین کی شدید مخالفت کیوں کرتا ہے ؟ ایسے حقائق جن سے آپ ناواقف ہونگے

لاہور (ویب ڈیسک) دوستی اور گہرے تعلقات کے لئے مفادات کامشترک ہونا ضروری ہے۔ اگر وہ فطری طور پر ایک دوسرے کے اتحادی نہیں تو پھر مصنوعی طور پر جتنی مرضی کوشش کر لی جائے، وہ کامیاب نہیں ہوسکتی۔ بھارت امریکہ کا فطری اتحادی ہے کہ اس خطے میں امریکہ چین کو

کائونٹر کرنے کے لئے بھارت کو ساتھ ملانے پر مجبور ہے۔نامور کالم نگار محمد عامر خاکوانی اپنے ایک کالم میں لکھتے ہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔اس کے فطری نتیجے کے طور پر پاکستان چین کے بہت قریب آیا ۔چین اور پاکستان اسی لئے فطری اتحادی ہیں۔اسی طرح چین ہی کو کائونٹر کرنے کے لئے امریکہ نے آسٹریلیا کو اپنے ساتھ ملایا ہوا ہے۔ اپنے دوست کو آسٹریلیا کی مثال دی کہ اس ملک کا چین کے ساتھ کوئی بڑا مسئلہ موجود نہیں۔ چین کا ہدف آسٹریلیا ہے اور نہ اس سے آسٹریلین کو کوئی خطرہ ہے۔ اس کے باوجود صرف امریکہ سے مفادات حاصل کرنے کی خاطر آسٹریلیا باقاعدہ اینٹی چین موقف اپنا چکا ہے۔ سائوتھ چائنا سمندر میں آسٹریلیا، جاپان، فلپائن وغیرہ نے امریکہ کی پشت پناہی پر چین کو ٹف ٹائم دینے کی کوشش کی ۔ مزے کی بات ہے کہ چین اور آسٹریلیا کے مابین گہرے اور مضبوط تجارتی تعلقات موجود ہیں،اربوں ڈالر کی تجارت ہوتی ہے۔ چین آسٹریلیا سے ان کی مشہور وائن اور مقامی کاشت ہونے والی بارلے (جو)کی فصل کا چالیس پچاس فیصد تک خریدتا ہے۔اس کے باوجود پچھلے چند برسوں میں آسٹریلیا نے مسلسل چین مخالف پالیسیاں بنائی ہیں۔سنکیانگ سے لے کر تبت اور ہانگ کانگ کے ایشوز پر آسٹریلیا نے چین کو ہدف تنقید بنائے رکھا ہے۔ سائوتھ چائنا سمندر کا ابھی ذکر کیا، اس کے علاوہ آسٹریلیا پہلا ملک ہے جس نے مشہور چینی موبائل کمپنی ہواوے کو اپنے ہاں فائیو جی کا ٹینڈر لینے سے روک دیا۔ آسٹریلیا کی ان پالیسیوں کے جواب میں چین کو بھی آسٹریلوی بئیر اور بارلے پرکسٹم ڈیوٹیاں لگانی پڑیں ۔

چین اپنی درآمدات کے لئے اب دیگر آپشنز ڈھونڈ رہا ہے۔آسٹریلوی حکومت نے حال ہی میںیہ قانون پاس کیا ہے کہ مرکزی حکومت کو کسی بھی ریاست (صوبے)کے کسی غیر ملکی حکومت سے تجارتی معاہدے کو منسوخ کرنے کا حق حاصل ہوگا۔ اس قانون کا مقصد چین کے خلاف مزید تجارتی پابندیاں لگانا ہی ہے۔ چین آسٹریلیا مخاصمت کا ایک بڑا فائدہ یہ ہوا ہے کہ چینی حکومت نے کھل کر افغانستان میں آسٹریلوی فوجیوں کی جانب سے ظلم کی کھل کر مذمت کی ہے۔ چند دن پہلے چینی وزارت خارجہ کے ترجمان نے ایک چینی آرٹسٹ کی بنائی ہوئی کارٹون تصویر ٹوئٹ کی،’‘‘ترجمان نے اپنے ٹوئٹ میں لکھا کہ آسٹریلوی فوجیوں کی جانب سے افغان سویلین اور قیدیوں کو زندگی سے محروم کرنے کے واقعات سے صدمے میں ہیں، ہم اس کی سخت مذمت کرتے ہیں اور ذمہ داروں کو سزا دینے کا مطالبہ کرتے ہیں۔ اس ٹوئٹ پر بڑا ہنگامہ کھڑا ہوگیا۔ آسٹریلیا نے اس پر شدید احتجاج کیا، ان کے وزیراعظم نے چین کے خلاف ایک سخت بیان دیا اور ٹوئٹر سے ٹوئٹ ڈیلیٹ کرنے کی اپیل کی۔آسٹریلوی وزیراعظم نے چینی حکومت سے اس ٹوئٹ پر معافی مانگنے کا مطالبہ بھی کیا۔ ٹوئٹر نے خیر اس اپیل کولفٹ نہیں کرائی، جبکہ آسٹریلیا میں چینی سفارت خانے کی جانب سے ٹوئٹ کا دفاع کرتے ہوئے کہا گیا کہ افغانستان میں آسٹریلوی فوجیوں کی جناب سے ظلم کے جن واقعات کی تصدیق ہوچکی ہے، اس کے بعد آسٹریلیا میں کسی کو اس کارٹون پر ناراض نہیں ہونا چاہیے۔ (ش س م)

Share

About admin

Check Also

پاکستان اور ترکی کے درمیان بڑا فوجی معاہدہ طے، پاکستان ٹینک خریدے گا رسو ل اللہ ﷺ کی پیش گوئی پوری ہوگئی، ہارون الرشیدکا حیران کن انکشاف

پاکستان اور ترکی کے درمیان بڑا فوجی معاہدہ طے، پاکستان ٹینک خریدے گا رسو ل …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Powered by themekiller.com