Home / اہم خبریں / ماں نے محبت کی لازوال مثال قائم کر دی،کینسر کی مریضہ بیٹی کو ڈھارس بندھانے کے لیے اپنے سر کے بال کاٹ کر خود کو گنجا کر دیا

ماں نے محبت کی لازوال مثال قائم کر دی،کینسر کی مریضہ بیٹی کو ڈھارس بندھانے کے لیے اپنے سر کے بال کاٹ کر خود کو گنجا کر دیا

ویب نیوز : دل کو موہ لینے والی ویڈیو اس وقت سوشل میڈیا پر سب کی توجہ کا مرکز بنی ہوئی ہے کہ دل کو چھو لینے والے ایسے مناظر بہت کم ہی آنکھوں کے سامنے آتے ہیں۔ ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ ایک نوجوان لڑکی آئینے کے سامنے بیٹھی اپنے سر کے بال کاٹ رہی ہے اور اس کی آنکھوں سے ٹپ ٹپ کرتے آنسوؤں کی لڑی بھی جاری ہے۔ جبکہ اپنے خوبصورت بال کاٹںے کے اس دردناک لمحے کی وہ ویڈیو بھی بنا رہی ہے۔ابھی وہ لڑکی بال کاٹ ہی رہی ہوتی ہے کہ اس کے پیچھے ایک عمر رسیدہ خاتون آئینے کے سامنے آ کر کھڑی ہوتی اور بڑے باوقار انداز میں اپنے سر کے بال مشین سے اتارنا شروع کر دیتی ہے۔ سامنے بیٹھی نوجوان لڑکی ہکا بکا رہ جاتی اور حیرت سے کہتی ہے کہ ماں آپ ایسا کیوں کر رہی ہو،

مگر عمر رسیدہ خاتون اس کے کسی بھی سوال کا جواب دیے بغیر اپنے سر کے بال اتارتی چلی جاتی ہے اور جب وہ اپنے سر کے بال کاٹ لیتی اور اپنا سر گنجا کر لیتی ہے تو نوجوان لڑکی کے چہرے کو اپنے ہاتھوں میں بھر کر اسے پیار دیتی ہے۔ مبینہ ویڈیو سے متعلق بتایا جا رہا ہے کہ ویڈیو میں نظر آنے والی نوجوان لڑکی کینسر کی مریضہ ہے جسے ڈاکٹر نے علاج کی غرض سے سر کے بال کاٹنے کا کہاہے۔لہٰذا کینسر جیسے موذی مرض سے لڑائی کرنے کے لیے وہ خاتون اپنے سر کے بال کاٹتے ہوئے رنجیدہ تھی اور اس لمحے کو کیمرے کی آنکھ میں قید بھی کر رہی تھی۔لڑکی کی ماں نے جب اپنی بیٹی کو سر کے بال کاٹنے پر غمزدہ دیکھا تو بیٹی کی ڈھارس بندھانے کے لیے اس خاتون نے اپنے سر کے بال بھی کاٹ دیے تاکہ بیٹی کا حوصلہ بلند رہے اور وہ کینسر جیسے موذی مرض کا سامنا کر سکے۔ اسے کہتے ہیں ماں کی محبت کہ وہ اپنی اولاد کے ہر دکھ سکھ میں ساتھ ہوتی ہے اور ان کی خوشی کی خاطر یا ان کے چہرے پر مسکراہٹ لانے کے لیے وہ کوئی بھی کام کرنے کو تیار ہو جاتی ہے۔

Share

About admin

Check Also

پاکستان میں قیمتیں کب سے کم ہونگی؟عوام کے لیے بڑی خوشخبری

پاکستان میں قیمتیں کب سے کم ہونگی؟عوام کے لیے بڑی خوشخبری ترجمان وزارت خزانہ مزمل …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Powered by themekiller.com